فینیش -روسی سرحد پر احتیاطی کی نگاہیں لگی ہیں

فینیش -روسی سرحد پر احتیاطی کی نگاہیں لگی ہیں

جمعرات, 26 May, 2022 - 09:15
ویلیما ریجن میں ایسے سائن بورڈ دیکھے جا سکتے ہیں جس میں ہیلسنکی اور روسی شہر سینٹ پیٹرزبرگ سے سرحدی علاقے کو الگ کرنے والے فاصلے کو دکھلایا گیا ہے (الشرق الاوسط)
یوکرین میں موجودہ روسی جنگ کی وجہ سے ہیلسنکی کے ذریعہ اپنی تاریخی غیرجانبداری ترک کرنے کے بعد حالیہ تناؤ کے باوجود فینیش - روس کی سرحدوں پر پرسکون ماحول دیکھنے کو مل رہا ہے۔
 
فینیش کی طرف سے ویلیما کراسنگ پر جسے دونوں ممالک کے مابین سب سے زیادہ بھیڑ والا سمجھا جاتا ہے وہاں سے کچھ کاریں وقتا فوقتا گزرتی ہیں اور اس سے تھوڑا دور پڑوسی بارڈر دیہات میں رہائشیوں کا کہنا ہے کہ وہ روس سے خوفزدہ نہیں ہیں اور اس کے باوجود وہ نیٹو میں شامل ہونے کے اپنے ملک کے فیصلے پر زیادہ محفوظ محسوس کرتے ہیں۔

اگرچہ اب دونوں ممالک کے مابین سرحد پر تناؤ نظر نہیں آرہا ہے جو 1300 میٹر سے زیادہ کی لمبائی تک دونوں سرحدیں آپس میں ملی ہوئیں ہیں لیکن وہ واقعی موجود ہیں اور فینیش بارڈر گارڈز کے ترجمان میٹی بیٹکنٹے نے الشرق الاوسط کو بتایا ہے کہ سرحد کی صورتحال فی الحال مستحکم ہے اور اس بات کی تصدیق بھی کی ہے کہ یوکرین میں جنگ کے آغاز سے ہی ڈرامائی تبدیلیاں واقع ہوئی ہیں لیکن انہوں نے جلد سے یہ بھی کہا کہ ہمیں تناؤ کا علم ہے اور ہم صورتحال کو محتاط انداز میں دیکھ رہے ہیں اور کسی بھی تبدیلی کا فوری جواب دینے اور تصرف کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔(۔۔۔)


جمعرات  24 شوال المعظم  1443 ہجری  - 26   اپریل   2022ء شمارہ نمبر[15885]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا