یوکرین نے الحاق کا جواب دینے کے لئے مزید مغربی ہتھیاروں کا مطالبہ کیا ہے

یوکرین نے الحاق کا جواب دینے کے لئے مزید مغربی ہتھیاروں کا مطالبہ کیا ہے

جمعرات, 29 September, 2022 - 15:45
یوکرین کے صدر ولادیمیر زیلینسکی کو دیکھا جا سکتا ہے (ڈی پی اے)
یوکرین نے مغربی ممالک سے روس سے لڑنے کے لئے اسلحے کی امداد میں نمایاں اضافے کا مطالبہ کیا ہے اور یہ مطالبہ یوکرین کے چار خطوں میں روس کے ساتھ الحاق کے مقصد سے کرائے گئے ریفرنڈم کے جواب میں سامنے آیا ہے۔

یوکرائنی وزارت خارجہ نے یوکرائنی افواج کو ٹینکوں، لڑاکا طیاروں، بکتر بند گاڑیوں، طویل فاصلے تک مار کرنے والے توپ خانوں، طیارہ شکن آلات اور میزائل دفاعی آلات کی ضرورت کو دیکھتے ہوئے مزید فوجی تعاون کا مطالبہ کیا ہے۔


یوکرین کے صدر ولادیمیر زیلنسکی نے خبردار کیا ہے کہ جعلی ریفرنڈم اور یوکرائنی سرزمین کو ضم کرنے کی کوششیں ماسکو کے ساتھ کسی بھی بات چیت کو ختم کر دیں گی اور یہ اس وقت تک برقرارا رہے گا جب تک ولادیمیر پوٹن صدر رہیں گے اور ساتھ ہی روس کی مکمل تنہائی اور نئی، مضبوط عالمی پابندیاں عائد کرنے کا مطالبہ کیا ہے اور انہوں نے یوکرین کے دفاع کے لئے اضافی فوجی اور مالی مدد پر زور دیا ہے یہاں تک کہ حملہ آور ہار جائے اور ساتھ ہی روس کے ذریعہ یوکرائنی علاقے پر قبضہ کرنے کے تازہ اقدام کے جواب میں اپنے ملک کے لئے اجتماعی سلامتی کی واضح اور قانونی طور پر پابند ضمانتیں فراہم کئے جائیں اور انہوں نے یہ بھی کہا کہ روس کی طرف سے ان جعلی ریفرنڈموں کو معمول کے طور پر تسلیم کرنا اور قرم کے منظر نامے پر عمل درآمد اور یوکرین کے علاقے کو الحاق کرنے کی ایک اور کوشش کا مطلب یہ ہوگا کہ روسی صدر کے ساتھ اب بات کرنے کے لئے کچھ بھی نہیں بچا ہے اور انہوں نے مزید کہا کہ الحاق ایک ایسا اقدام ہے جو اسے پوری انسانیت کے خلاف تنہا کر دے گا۔(۔۔۔)


جمعرات 04 ربیع الاول 1444ہجری -  29 ستمبر   2022ء شمارہ نمبر[16011]


Related News



انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا