ریاض کی مثال ایک چھوٹے سے گاؤں کی طرح ہوئی

ریاض کی مثال ایک چھوٹے سے گاؤں کی طرح ہوئی

بدھ, 25 March, 2020 - 18:00
کرفیو کے پہلے دنوں میں ریاض کی ایک خالی سڑک کو دیکھا جا سکتا ہے (تصویر: احمد فتحی)
ریاض ایک چھوٹے سے گاؤں کی طرح نہیں ہے جسے جلد سونے کی عادت ہو۔۔ وہ شہر جسے خوشی سے نورانی لباس پہننے، دلکش موسموں میں رقص کرنے، آتش بازی کرنے اور سینما گھر کھلے رہنے کی عادت ہے اور بعض لوگ عوامی مقامات جیسے"بولیوارڈ" اور "ریاض پارک" میں دیکھے جاتے ہیں ہیں۔۔ آج وہی لوگ اپنے گھروں میں بند اور صفائي اور ستھرائی کا بہت خیال کر رہے ہیں۔
میں اس کے بارے میں سوچ رہا تھا کہ گوگل میپ میں ریاض کس طرح مکمل طور پر سبز ہو گیا اور ایک بھاری میٹروپولیٹن نیٹ ورک میں سرخ اور نارنگی کا رنگ اب نظر نہیں آرہا ہے اور لاکھوں کاریں ان کے گیراجوں میں چھپی ہوئی ہیں اور میرے گھر سے دور شمال میں واقع حی وزارت تک جانے میں ایک گھنٹہ لگتا تھا لیکن اب 30 کلومیٹر کا سفر طے کرنے کے لئے 20 منٹ کافی ہیں۔(۔۔۔)
بدھ 30 رجب المرجب 1441 ہجرى - 25 مارچ 2020ء شماره نمبر [15093]

انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا