دمشق کی ایک عدالت کی طرف سے رامی مخلوف کے سفر کرنے پر پابندی

دمشق کی ایک عدالت کی طرف سے رامی مخلوف کے سفر کرنے پر پابندی

جمعہ, 22 May, 2020 - 18:00
گزشتہ روز شامی حکام نے صدر بشار الاسد کے خالہ زاد بھائی رامی مخلوف کے خلاف ایک اضافی اقدام اٹھایا ہے جس میں دمشق کی انتظامی عدالت نے ان کے ملک سے سفر کرنے پر پابندی لگائی ہے اور یہ فیصلہ آئین کی دفعات کے مطابق لیا گيا ہے۔

 
عدالت نے گزشتہ روز ایک بیان میں کہا ہے کہ یہ فیصلہ وزارت ٹرانسپورٹیشن کے ایک مقدمے کی بنیاد پر لیا گیا ہے تاکہ اس سیریٹل کمپنی سے 185 ملین امریکی ڈالر کی کی شکل میں مخلوف سے ادائیگی کو یقینی بنایا جا سکے جس کے بورڈ آف ڈائریکٹرز مخلوف ہیں اور وہ ہی اس کے بیشتر حصوں کی مالک ہیں۔

 
رامی کے بھائی ایہاب نے اس سے قبل اعلان کیا ہے کہ کمپنی کے انتظام کو لے کر اپنے بھائی کے ساتھ تنازعہ کی وجہ سے انہوں نے سیریٹل کے وائس چیئرمین کے عہدہ سے استعفیٰ دے دیا ہے اور انہوں نے اس بات کی نشاندہی بھی کی ہے کہ وہ اب صدر بشار الاسد کے ساتھ اپنی وفاداری ثابت کرنے والے ہیں۔

 
"دمشق کی اسٹاک ایکسچینج" نے ایک روز قبل ہی ملک کے ان 12 بینکوں اور نجی مالیاتی اداروں میں رامی مخلوف کے حصوں پر قبضہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے جن میں "بینک عودہ"، "بائبلس بینک"، "عرب بینک" اور "فرانسس بینک" شامل ہیں۔(۔۔۔)

 
جمعہ 29 رمضان المبارک 1441 ہجرى - 22 مئی 2020ء شماره نمبر [15151]

انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا