"آکسفورڈ ویکسین"، امید افزا نتائج اور توسیع شدہ تجربات

"آکسفورڈ ویکسین"، امید افزا نتائج اور توسیع شدہ تجربات

ہفتہ, 23 May, 2020 - 09:30
گذشتہ روز غزہ کی ایک مسجد میں نماز جمعہ سے قبل نمازیوں کو ماسک پہنے اور دوری کے اصولوں پر عمل کرتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے (اے پی)
عواصم: «الشرق الاوسط»
آکسفورڈ یونیورسٹی 1000 رضاکاروں میں ویکسین کے پہلے مرحلے کے اختتام کے بعد کرونا وائرس کی ویکسین کے سلسلہ میں انسانی تجربات کے دوسرے اور تیسرے مرحلے کا آغاز کرنے کے لئے تیاری کر رہی ہے اور اس کا مقصد معاشرے کے وسیع طبقے پر اس کی تاثیر کی جانچ کرنا اور ان کو انفیکشن سے بچانے کی صلاحیت کو جاننا ہے۔

 
ایک امید افزا ترقی کے سلسلہ میں آکسفورڈ ویکسین گروپ کے صدر پروفیسر اینڈریو پولارڈ نے کل کہا ہے کہ تحقیقات بہت بہتر ہو رہی ہیں اور انہوں نے مزید کہا کہ اگلے مرحلے میں اس ویکسین کے ذریعہ عمردراز لوگوں میں مدافعتی ردعمل کو تیز کرنے کی صلاحیت کا اندازہ ہوگا اور پھر یہ بھی اندازہ ہوگا کہ آیا یہ عام آبادی میں تحفظ فراہم کر سکتی ہے یا نہیں اور اس بات کی بھی توقع کی جا رہی ہے کہ دوسرے مرحلے میں 10 ہزار سے زیادہ افراد شامل ہوں گے  اور جن لوگوں پر ویکسین کی جانچ کی جا رہی ہے ان کے عمر گروپ میں بھی توسیع کی جائے گی۔(۔۔۔)

 
ہفتہ 30 رمضان المبارک 1441 ہجرى - 23 مئی 2020ء شماره نمبر [15152]

انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا