سعودی عرب نے لیبیا بحران کے حل کے سلسلہ میں ہمسایہ ممالک کے کردار پر زور دیا ہے

سعودی عرب نے لیبیا بحران کے حل کے سلسلہ میں ہمسایہ ممالک کے کردار پر زور دیا ہے

بدھ, 29 July, 2020 - 10:15
جزائر کے صدر عبد المجید تبون کو سعودی عرب کے وزیر خارجہ سے ملاقات کے دوران دیکھا جا سکتا ہے (الشرق الاوسط)
تیونس - جزائر: «الشرق الاوسط»
سعودی وزیر خارجہ شہزادہ فیصل بن عبد اللہ بن فرحان کل منگل کے دن جزائر سے تیونس کے دورہ پر پہنچے ہیں اور انہوں نے لیبیا بحران کے حل کے سلسلہ میں پڑوسی ممالک کے کردار پر زور دیتے ہوئے دونوں ممالک کے ساتھ نظریات کے ارتباط کی تصدیق کی ہے۔

تیونس کے صدر قیس سعید سے ملاقات کے بعد شہزادہ فیصل بن فرحان نے کہا کہ انہوں نے دونوں ممالک کے مابین تعلقات کا جائزہ لیا ہے اور تیونس کے صدر سے اس بات کی تاکید کی ہے کہ سعودی قیادت دونوں ممالک کے مابین تعاون بڑھانے کا خواہش مند ہے اور یہ بھی کہا کہ صدر سعید نے ان تعلقات کو آگے بڑھانے کی اہمیت پر زور دیا ہے اور انہوں نے مزید کہا کہ خطے کو درپیش بہت سارے چیلنجوں کے سلسلے میں سعودی عرب اور تیونس کے مابین زبردست ہم آہنگی پائی گئی ہے اور لیبیا کی صورتحال اس سے کم نہیں  ہے۔


جزائر میں شہزادہ فیصل بن فرحان نے صدر عبد المجيد تبون اور وزیر خارجہ صبري بوقادوم سے ملاقات کی ہے اور سعودی وزیر نے اپنے جزائر کے ہم منصب سے بات چیت کے بعد کہا کہ ہم نے علاقائی صورتحال پر تبادلۂ خیال کیا ہے اور مملکت اور جزائر کے مابین ہمارے خیالات میں اتفاق رائے پایا گیا ہے اور خاص طور پر خطے کو درپیش ان چیلنجوں کے سلسلہ میں ہم ساتھ ہیں جن میں لیبیا کا بحران سرفہرست ہے جس کے سلسلہ ہم نے بڑے پیمانے پر تبادلۂ خیال کیا ہے اور انہوں نے لیبیا میں حل تک پہنچنے کے لئے لیبیا کے ہمسایہ ممالک کے کردار کی اہمیت اور مرکزیت پر بھی زور دیا ہے۔(۔۔۔)


بدھ 08 ذی الحجہ 1441 ہجرى - 29 جولائی 2020ء شماره نمبر [15219]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا