خادم حرمين: حجاج کی محدود تعداد کے لئے دوہری کوششوں کی ضرورت پڑي

خادم حرمين: حجاج کی محدود تعداد کے لئے دوہری کوششوں کی ضرورت پڑي

ہفتہ, 1 August, 2020 - 12:45
گزشتہ روز اللہ کے مقدس گھر کے حجاج کرام کو کعبہ کے گرد طواف کرتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے (اے ایف پی)

خادم حرمين شریفین شاہ سلمان بن عبد العزیز نے پرزور انداز میں کہا ہے کہ اس سال مختلف ملکوں کے حجاج کرام کی تعداد کو محدود کرنے کا اصل مقصد وبائی امراض کی وجہ سے پیدا ہونے والے صورتحال کے باوجود حج جیسی عبادت کو قائم کرنا ہے اور اسی کے ساتھ حجاج کرام کی حفاظت بھی مطلوب ہے تاکہ وہ روحانی ماحول میں مناسک حج ادا کر سکیں اور ان کی حفاظت اور ان کی راحت کے لئے چند اقدامات بھی کئے گئے ہیں اور امید ہے کہ سعودی عرب نے اس سلسلے میں جو اقدامات کئے ہیں ان کے سلسلہ میں مسلمانوں نے بڑی تعریف کی ہے۔


شاہ سلمان نے اس بات کی طرف بھی اشارہ کیا ہے کہ اس سال کے حج نے سرکاری آلات کو مجبور کیا ہے کہ وہ عازمین کی براہ راست پیشرفت اور ان کی حفاظت کو یقینی بنانے کے لئے دوہری کوششیں کریں اور اس سلسلہ میں انہوں نے وطن کے فوجیوں کی بھی تعریف کی ہے جنہوں نے اپنے ملک کے لئے خود کو قربانی کے طور پر پیش کیا ہے اور پیش کرتے رہیں گے اور دعا بھی کی ہے کہ جس نے اس سال حج کا ارادہ کیا ہے اور وہ نہیں کرسکے ہیں تو اللہ ان کو اجر دےگا۔(۔۔۔)


ہفتہ 11 ذی الحجہ 1441 ہجرى - 01 اگست 2020ء شماره نمبر [15222]

 


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا