لبنان کی طرف سے ایران کے ذریعہ حزب اللہ میزائلوں کے استعمال کے اشارہ کا کیا گیا انکار

لبنان کی طرف سے ایران کے ذریعہ حزب اللہ میزائلوں کے استعمال کے اشارہ کا کیا گیا انکار

پیر, 4 January, 2021 - 11:30
پرسو "حزب اللہ" کے ممبران کو لبنان اور اسرائیلی سرحد پر سلیمانی کی تصویر والے بینر کے سامنے دیکھا جا سکتا ہے (رائٹرز)
ایرانی پاسداران انقلاب کے فضائیہ کمانڈر علی حاجی زادہ کے وہ بیانات جن میں انہوں نے کہا ہے کہ غزہ اور لبنان کی میزائل صلاحیتیں اسرائیل کا مقابلہ کرنے کے سلسلہ میں پہلی لائن ہے اور بعد میں لبنان کی طرف سے اس کے مخالف رد عمل اس وقت ظاہر ہوا جب حزب اللہ کے سیکرٹری جنرل حسن نصر اللہ نے اس بات کی تصدیق کی  کہ ایران میزائلوں سے ہماری مدد کرتا ہے اور ہم اور غزہ سامنے سے ایک مورچہ ہیں۔

جبکہ صدر جمہوریہ مائکل عون نے ایک عام ردعمل پر اکتفا کرتے ہوئے کہا کہ لبنانیوں کے لئے اپنے وطن کی آزادی، اس کی سرحدوں، اس کی سرزمین اور فیصلے کی آزادی اور اس کی خودمختاری کے تحفظ میں اس کا کوئی شراکت دار نہیں ہے اور بعد میں خاص طور پر لبنانی فورسز پارٹی کی طرف سے ان کے اس موقف کو تنقید کا نشانہ بنایا گیا ہے جس میں صدر نے اپنے نائبین سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ اس بات کی تصدیق کریں کہ لبنان کی آزادی کو محفوظ رکھنے کے لئے ان کا کوئی شراکت دار نہیں ہے اور اس بات میں حزب اللہ کی طرف اشارہ ہے۔(۔۔۔)


پیر  21 جمادی الاولی 1442 ہجرى – 04 جنوری 2021ء شماره نمبر [15378]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا