خوجہ کی ڈائری۔۔ سوویت کے خاتمے سے لے کر ترکی میں پراسرار طریقے سے قتل کی کوششوں تک

خوجہ کی ڈائری۔۔ سوویت کے خاتمے سے لے کر ترکی میں پراسرار طریقے سے قتل کی کوششوں تک

جمعرات, 5 March, 2020 - 14:15
سابق سعودی وزیر عبد العزیز محی الدین خوجہ نے اپنی ڈائری میں ایسے بہت سے پہلوؤں کا انکشاف کیا ہے جن کا سامنا انہیں سفارتی، سیاسی اور میڈیا کے میدانوں میں اپنے طویل کیریئر کے دوران سامنا کرنا پڑا ہے اور الشرق الاوسط کو اس ڈائری کے نشر ہونے سے پہلے اس کی ایک کاپی ملی ہے۔
خوجہ ماسکو میں سفیر کے طور طور پر کام کرنے کے دوران اس وقت روک سے گئے جب انہوں نے سوویت یونین کے خاتمے کا مشاہدہ کیا اور انہیں ترکی میں سعودی سفارتکاروں کے ساتھ پراسرار قتل کی کوششوں کا سامنا کرنا پڑا اور پھر اس کے بعد انہوں نے مراکش، لبنان اور وزارت اطلاعات میں کئی سال کام کئے۔
بیروت میں "تجربہ ... ثقافت، سیاست اور میڈیا کے باہمی رابطوں" کے عنوان سے "میزیں" کے ذریعہ شائع کردہ اس کتاب میں سفیر خوجہ کے سفارتی کام کے رازوں کے بارے میں کچھ دلچسپ معلومات موجود ہیں اور اس کتاب میں ان ممالک میں جہاں انہوں نے کام کیا ہے وہاں کے کچھ اہم سیاسی رہنماؤں کے بارے میں بھی ایک جائزہ پیش کیا گیا ہے۔(۔۔۔)
جمعرات 10 رجب المرجب 1441 ہجرى - 05 مارچ 2020ء شماره نمبر [15073]

انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا